کالعدم لشکر طیبہ پاک بھارت تعلقات میں رکاوٹ ہے، امریکی انٹیلی جنس

کالعدم لشکر طیبہ پاک بھارت تعلقات میں رکاوٹ ہے، امریکی انٹیلی جنس

 

واشنگٹن: امریکی نیشنل انٹیلی جنس کے ڈائریکٹرجیمزکلیپر نے کہا ہے کہ پاکستان کی جانب سے کالعدم لشکرطیبہ کی مبینہ حمایت پاکستان اوربھارت کے درمیان تعلقات میں کشیدگی کاباعث رہے گی۔

امریکی سینیٹ کی آرمڈسروسز کمیٹی کی سماعت کے دوران امریکی انٹیلی جنس کمیونٹی کے عالمی خدشات کے جائزے سے متعلق اپنی رپورٹ میں جیمز کلیپر نے بتایا کہ 2014عالمی دہشت گردی کے لحاظ سے تاریخ کا بدترین سال ثابت ہوا، 2013میں دنیابھر میں 11500 دہشت گردحملوں میں22 ہزار افراد اور2014 کے ابتدائی 9 ماہ میں 13 ہزاردہشت گرد حملوں میں31ہزار افرادہلاک ہوئے، مجموعی ہلاکتوں میں نصف صرف پاکستان، افغانستان اورعراق میں ہوئیں، انسانی تاریخ میں گزشتہ سال عالمی دہشت گردی کیلیے مہلک ترین سال ریکارڈ کیا گیا۔

جیمز کلیپر نے انتہاپسندی کے خطرے کے سنگین ارتقاپر کانگریس کے سامنے اس بات کی تصدیق کی اور بتایاکہ 180 امریکیوں نے شام اورعراق میں لڑنے کیلیے سفرکیا، 3400 سے زائد مغربی جنگجوعراق اورشام گئے۔ انھوں نے غیرملکی حکومتوں اورجرائم پیشہ عناصرکی جانب سے سائبر حملوں کو ملک کودرپیش خطرات میں سرِفہرست قرار دیا اور کہا کہ امریکی فوج سائبرحملوں سے نمٹنے کیلیے سائبر کمانڈ ترتیب دے رہی ہے۔

 

Pin It

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <strike> <strong>